<< Previous Next >>

Note 14 - Presenting your case: Supporting statements

Hello and welcome to lesson 14 of 21! In the last lesson, you learnt how to make a timeline of what you experienced. In this lesson, we will discuss how to present supporting statements as evidence. You might feel overwhelmed reading this, but take it slowly!

Supporting statements serve different purposes, depending on what you are applying for. While it is important to allow the person writing the statement to express their opinion freely, ensure that they know what it will be used for and why it is important to you.

For example,

  • If you are seeking child custody, a statement about your character and relationship with your children is very important.

  • If you are looking for asylum, they can write about your situation and why returning to your country is not safe for you.


Ultimately, it depends on who is writing for you. Here are some people who can write statements for you:

  • Friends, family, neighbours, colleagues, your boss
  • Social workers, doctors, nurses
  • Any NGO or charity supporting you
  • Your children’s teacher, your teacher
  • Anyone who has witnessed the abuse first-hand or seen its effects on you
  • Anyone you have confided in about your situation

Each statement should include

  • Personal details like the writer’s full name, their relation to you, date of birth, marital status, and their personal and professional addresses.

  • A copy of their ID.

  • Contact details like a phone number and email address.

  • Thier signature.


Make sure they mention when they first came to know about your situation and the details of any incidents they have witnessed. If they have any evidence, they should include those too.

It is important to have as many details as possible, but just like your own statement, it has to be precise and concise. If you have more than one statement, it is a good idea to separately write a list of all the people who wrote for you, and their relation to you.

REMEMBER: Supporting statements are very crucial and can help your case immensely.

ACTION: Try approaching at least one or two individuals who may be willing to write supporting statements for you. Plan how you can approach them and ask them for help without putting yourself or them at risk.

NEXT: We will look at audio evidence.

And don’t forget: You are valuable. You are powerful. You can do this!

The Soul Medicine team

ملاحظة رقم 14 - تقديم قضيتكِ: التصريحات الداعمة

أهلاً وسهلاً بكِ يا عزيزتي في هذا الملاحظة الرابعة عشر من إحدى وعشرون ملاحظة! في الملاحظة السابقة لقد تكلمنا عن كيفية وضع جدول زمني للأحداث التي مررتِ بها. في هذه الملاحظة سوف نتحدث عن كيفية تقديم التصريحات الداعمة كشكل من الأدلة. قد تشعرين بالإرتباك عندما تقرأين هذه الملاحظة, لذلك خذي الأمور ببطء.

تخدم التصريحات الداعمة أغراضًا مختلفة ،بحسب نوع ما تتقدمين به. في حين أنه من المهم السماح للأشخاص الذين يكتبون التصريح بالتعبير عن آرائهم بحرية ، تأكدي من أنهم يعرف كيف سيتم استخدام التصريح ولماذا هو مهم بالنسبة لكِ.

على سبيل المثال:

  • إذا كنت تبحثين عن حضانة الأطفال ، فإنه من المهم للغاية بأن يكون لديكِ تصريح يبين شخصيتك وعلاقتك بأطفالك.
  • إذا كنت تبحثين عن اللجوء ، فيمكنهم الكتابة عن وضعكِ ولماذا ليست العودة إلى بلدكِ غير آمنة لكِ.

في النهاية ، يعتمد الأمر على من يكتب لكِ هذا التصريح. فيما يلي بعض الأشخاص الذين يمكنهم كتابة التصريحات لكِ:

  • أصدقائكِ, عائلتكِ, جيرانكِ, زملائكِ في العمل, او مديركِ.
  • المساعدون الاجتماعيون, الأطباء, الممرضين\الممرضات.
  • أي منظمة غير حكومية او خيرية تساعدكِ.
  • معلم\ات أطفالكِ, معلمكِ\معلمتكِ.
  • اي شخص كان شاهد على سوء المعاملة العنف الذي تعرضتِ له او كان شاهد على تأثير سوء المعاملة او العنف عليكِ.
  • أي شخص تثقين بهم وعلى دراية بحالتكِ.

كل تصريح يجب أن يشمل على ما يلي:

  • التفاصيل الشخصية مثل الإسم الكامل للكاتب وعلاقته\ها بكِ وتاريخ الميلاد, الحالة الزواجية وعناوينهم الشخصية والمهنية.
  • صورة عن هويتهم الشخصية.
  • تفاصيل الاتصال مثل رقم الهاتف وعنوان البريد الإلكتروني.
  • التوقيع الخاص بهم.

تأكدي من أن يذكروا عندما تعرفوا أولاً على حالتكِ وتفاصيل أي حوادث شاهدوها. يجب أن يشملوا أي دليل إذا كان لديهم.

من المهم أن يكون لديكِ أكبر عدد ممكن من التفاصيل ، ولكن مثل التصريح الخاص بكِ ، يجب أن يكون دقيق وموجز. إذا كان لديكِ أكثر من تصريح واحد ، فمن الأفضل أن تكتبي بشكل منفصل قائمة بجميع الأشخاص الذين كتبوا تصاريح من أجلكِ ، وعلاقتهم بكِ .

تذكري: التصريحات الداعمة مهمة للغاية لمساعدتكِ لبناء قضيتكِ بشكل أفضل.

سلوك: حاولي الإتصال بشخص واحد أو شخصين على الأقل قد يكونوا على إستعداد لكتابة تصريحات داعمة لكِ. خططي كيف يمكنكِ التقرب منهم وطلب المساعدة دون تعريض نفسكِ أو تعرضهم للخطر.

التالي: سوف نلقي نظرة على الأدلة الصوتية.

ولكن لا تنسي: أنت ذات قيمة. أنتِ قوية. ويمكنكِ القيام بذلك!

أصدقائكِ في سول ميديسن (طب الروح)

نوٹ نمبر ١٤ - اپنے کیس کو پیش کرنا: حمایتی بیان

ہیلو! ٢١ نوٹس میں سے ١٤ نوٹ میں خوش آمدید! پچھلے نوٹ میں، ہم نے جانا کہ کیسے گزرے ہوئے واقعات کی ٹائم لائن بنانی ہے- اس نوٹ میں، ہم بات کریں گے کہ کیسے حمایتی سٹیٹمنٹ کو شواہد کے طور پہ پیش کیا جا سکتا ہے- ہو سکتا ہے یہ سب پڑھ کے آپ کو گھبراہٹ ہونے لگے، پر ہم اسے آرام سے لے کے چلیں گے-

آپ کس چیز کے لئے درخواست دے رہے ہیں، اسی بناء پر حمایتی بیان کے کئی مختلف بیانات- جبکہ یہ ضروری ہے کہ جو انسان آپ کی سٹیٹمنٹ لکھ رہا، اسے رائے لکھنے کی آزادی ہو، اس بات کادھیان رکھیں کہ وہ جانتے ہوں کے یہ کس استعمال میں آئے اور یہ آپ کے لئے ضروری کیوں ہے-

مثال کے طور پہ،

  • اگر آپ بچے کی کسٹڈی لینے کی کوشش کر رہے ہیں، آپ کے کردار اور اپنے بچے سے تعلق کے متعلق بیان ہونا بہت ضروری ہے-
  • اگر آپ اسائلم کی تلاش میں ہیں، وہ آپ کی صورتِ حال کے بارے میں لکھ سکتے ہیں اور کیوں آپ کے واپس جانے پہ آپ کی جان کو خطرہ ہو سکتا ہے-

بلآخر، اس کا انحصار اس بات پہ ہوتا ہے کہ یہ آپ کے لئے کون لکھ رہا ہے- یہ کچھ لوگ ہیں جو آپ کے لئے سٹیٹمنٹ لکھ سکتے ہیں:

  • آپ کے دوست، فیملی، پڑوسی، کولیگ، آپ کا باس-
  • سوشل ورکرز، ڈاکٹرز، نرسز -
  • کوئی این جی او یا چیرٹی جو آپ کو سپورٹ کر رہی ہو-
  • آپ کے بچوں کی ٹیچر، آپ کے ٹیچر -
  • کوئی ایسا جس نے آپ پہ تشدّد ہوتے ہوئے خود دیکھا ہو یا اس کے اثرات آپ پہ دیکھے ہوں-
  • کوئی ایسا جس سے آپ نے اپنی صورتِ حال کے بارے میں بھروسہ کرکے بتایا ہو-

ہر سٹیٹمنٹ میں یہ ہونے چاہیے:

  • لکھنے والے کی ذاتی معلومات جیسا کہ لکھنے والے کا پورا نام، ان کا آپ سے تعلق، ان کی تاریخ پیدائش، ان کی ازدواجی حیثیت، اور ان کا پرسنل اور پروفیشنل ایڈریس-
  • ان کے شناختی کارڈ کی کاپی -
  • ان سے رابطہ کے لئے معلومات جیسا کہ ایک فون نمبر اور ای میل ایڈریس -
  • ان کی سائن-

دھیان رکھئیے گا کہ وہ اس بات کا ذکر کریں کہ انھیں آپ کی صورتِ حال کے بارے میں سب سے پہلے کب پتا چلا اور اگر انہوں نے ایسے کوئی واقعات اپنی آنکھوں سے دیکھیں ہیں تو ان کی تفصیلات کا ذکر کریں- اگر ان کے پاس کوئی ثبوت ہیں، توانھیں چاہیے کہ وہ ان کو بھی اس میں شامل کریں-

یہ ضروری ہے کہ آپ جتنی معلومات جمع کر سکتے ہیں کریں، لیکن اپنی ہی سٹیٹمنٹ کی طرح، وہ بھی مخصوص اور عین مطابق ہو- اگر آپ کے پاس ایک سے زیادہ سٹیٹمنٹ ہے، تو یہ اچھا ہوگا کہ آپ ان لوگوں کی ایک الگ سے لسٹ بنا لیں جنہوں نے آپ کے لئے لکھا ہو، اور ان کا آپ سے کیا تعلق ہے وہ بھی لکھیں-

یاد رکھیں: حمایتی بیان بہت اہم ہوتے ہیں اور آپ کے کیس کی بے انتہا مدد کر سکتے ہیں-

عمل: کوشش کریں کہ آپ ایک یا دو ایسے افراد سے رابطہ کر سکیں جو آپ کے لئے حمایتی بیان لکھنے کو راضی ہوں- منصوبہ بنائیں کہ آپ کیسے ان سے رابطہ کر کے خود کو خطرے میں ڈالے بغیر ان سے مدد مانگ سکیں-

اس کے بعد: ہم آڈیو شواہد پہ نظر ڈالیں گے-

مت بھولیں: آپ قابلِ قدر ہیں - آپ طاقتور ہیں- آپ یہ کر سکتے ہیں!

سول میڈیسن ٹیم-

<< Previous Next >>